”وہ مبارک دعا جس کے پڑھنےسے آسمان کے دروازے“

Mubarik Dua

بندوں کے چھوٹے چھوٹے اعمال پر بہت بڑے بڑے انعامات سے نوازتا ہے، اللہ تعالیٰ نے اپنے نبی رحمت ﷺکی زبانی کچھ ایسے مبارک لمحات و ساعات کا اعلان کروایا کہ اگربندہ ان مبارک لمحات میں اللہ کے رضا جوئی کے لئے اعمال صالحہ بجا لائے تو اس کے لئے آسمان کے دروازے کھول دیئے جاتے ہیں،اور اس کا یہ عمل عرش الٰہی تک جا پہونچتا ہے ۔یہاں ذیل میں ہم ان مبارک لمحات کا تذکرہ کر رہے ہیں تا کہ پڑھنے والوں کے دلوں میں ان لمحات و ساعات کی اہمیت پیوست ہو جائے اور اعمال صالحہ بجا لانے کا جذبہ بڑھے ۔ زوال شمس کے بعد ظہر کی آذان سے پہلے آسمان کے دروازے کھولے جاتے ہیں۔حضرت عبد اللہ بن سائب رضی اللہ عنہ سے روایت ہےکہ اللہ کے رسول ﷺ زوال شمس کے بعد ظہر سے پہلے چار رکعت نماز پڑھتے تھے،اور آپ ﷺ فرماتے کی یہ ایسا وقت ہے جس میں آسمان کے دورازے کھولے جاتے ہیں ،اور میں یہ پسند کرتا کرتا ہوں کہ اس وقت میرا کوئی عمل صالح اللہ کے یہاں پہونچے۔

ابو ایوب انصاری رضی اللہ عنہ سے روایت ہیکہ اللہ کے رسول ﷺ نے فرمایا : ظہر سے پہلے ایسی چار رکعتیں پڑھیں جائیں جن میں سلام کے ذریعہ فاصلہ نہ ہو تو ان کے لئے آسمان کے دروازے کھول دیئے جاتے ہیں۔ زوال شمس کے بعد ظہر کی آذان سے پہلے آسمان کے دروازے کھولے جاتے ہیں،اور اللہ کے رسول ﷺ سے اس وقت چار رکعت ایک ہی سلام سے پڑھنا مستحب ہے ۔جب یہ کلمات” اللَّهُ أَكْبَرُ كَبِيرًا وَالْحَمْدُ لِلَّهِ كَثِيرًا وَسُبْحَانَ اللَّهِ بُكْرَةً وَأَصِيلاً ” پڑھیں جائیں تب آسمان کا دروازے کھول دیئےجاتے ہیں۔حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہیکہ اللہ کے رسول ﷺ نے فرمایا : جب کوئی بندہ خلوص دل سےکلمہ ” لا إِلَهَ إِلا اللَّهُ “کہے گااور کبائر سے بچتا رہےگا۔

تو اس کے لئے آسمان کے دروازے کھول دیئے جائیں گے ،اور یہ کلمہ ” لا إِلَهَ إِلا اللَّهُ ” عرش تک جا پہنچے گا۔ حضرت وائل بن حجر رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں کہ میں نے اللہ کے رسول ﷺ کے ساتھ نماز پڑھی تو لوگوں میں سے کسی نے کہا “الْحَمْدُ لِلَّهِ كَثِيرًا طَيِّبًا مُبَارَكًا فِيهِ” جب اللہ کے رسول ﷺ نے نماز پڑھ لیا تو آپ ﷺ نے فرمایا کہ فلاں کلمات کہنے والا کون ہے؟ تو ایک آدمی نے کہا: میں نے کہا اور میں ان کلمات کے ذریعہ خیر چاہتا تھا،تو اللہ کے رسول ﷺ نےفرمایا تحقیق کے ان کلمات کےلئے آسمان کے دروازے کھول دیئے گئے اور عرش تک جانے سے کسی چیر نے نہیں روکا۔

Leave a Comment